NewsHub

عوامی تحریک اور منہاج القرآن کی خواتین کا لاہور پریس کلب کے باہر مارچ میرا حجاب میرا وقار، میری چادر میرا تحفظ کے پوسٹر اٹھا رکھے تھے

کراچی،لاہور (این این آئی) جماعت اسلامی کے رکن سندھ اسمبلی سید عبدالرشید نے خواتین مارچ سےمتعلق مقدمہ درج کرانے کے لیے آرٹلری میدان تھانے میں درخواست جمع کرا دی۔عبدالرشید کی جانب سے جمع کرائی گئی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ خواتین کے حقوق کے نام پر شرمناک کتبوں اور نکاح کے خلاف گفتگو پر قانونی کارروائی کی جائے ، مارچ میں خواتین کے حقوق کیلئے کوئی بات نہیں کی گئی صرف اسلامی اقدار پر تنقید کی گئی، شرمناک اور توہین آمیز پوسٹر اور وڈیو بیان سے پورے ملک میں مذہبی اشتعال انگیزی پھیلی اور مذہبی جذبات مجروح ہوئے۔اس حوالے سے ایس ایچ او آغا اسلم پٹھان نے رابطہ کرنے پر بتایا کہ پولیس نے درخواست وصول کرلی تاہم اس حوالے سے ابھی کوئی مقدمہ درج نہیں ہوا ہے اور مذکورہ درخواست سے متعلق آج اعلی افسران سے مشاورت کی جائیگی جس کے بعد ہی کوئی فیصلہ کیا جائیگا۔پاکستان عوامی تحریک اور منہاج القرآن ویمن لیگ کی طرف سے گزشتہ روز لاہور پریس کلب کے باہر پر امن مارچ کیا گیا ۔یہ مارچ یوم خواتین کے موقع پر بعض خواتین کی طرف سے لہرائے جانیوالے قابل اعتراض پوسٹرز کے ردعمل میں کیا گیا۔مارچ کی قیادت فرح ناز،سدرہ کرامت،عائشہ مبشر، زینب ارشد، انیتا الیاس، ڈائریکٹر وائس ثناءوحید، آمنہ بتول، نورین علوی، سدرہ کرامت نے کی، اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے فرح ناز نے کہا کہ 8مارچ کو یوم خواتین کے موقع پر کچھ خواتین نے خواتین کے حقوق کی آڑ میں خواتین کی تذلیل کی ان کے نعروں اور ان کے ایجنڈے کو مسترد کرتی ہیں،پاکستان کی باوقار خواتین صرف وہ حقوق مانگتی ہیں جن کی اسلام ،آئین پاکستان نے اجازت دی ہے۔اسلامی اقدار کے بر عکس لگائے جانیوالے نعروں سے خواتین اعلان لاتعلقی کرتی ہیں ہم ”نامعلوم“ خواتین کو اپنی اقدار کو ملیامیٹ کرنے کی اجازت نہیں دیں گی۔اس موقع پر خواتین نے پوسٹرز اور بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر نعرے درج تھے”ریاست خواتین کے وراثتی حق کی فراہمی کو یقینی بنائے“ ”تعلیم میرا حق ہے“ ”گھر کے کاموں میں ہاتھ بٹانا سنت نبوی ہے“ ”باعزت روزگار عورت کا حق ہے“ ”بیٹیاں اللہ کی رحمت ہیں“ ”میری چادر میرا تحفظ“”حیا میرا زیور ہے“”میرا حجاب میرا وقار“”بیٹیوں کی تربیت جنت کی ضمانت“ درج تھے۔اس موقع پر مرکزی صدر فرح ناز نے شرکائے مارچ کے سامنے قائد تحریک منہاج القرآن ڈاکٹر محمد طاہرالقادری کا پیغام بھی پڑھ کر سنایا جس میں ڈاکٹر طاہرالقادری نے کہا کہ ”اسلام وہ واحد الہامی دین اور ضابطہ حیات ہے جس نے زندگی کے ہر شعبہ میں ویمن امپاورمنٹ کی نہ صرف حوصلہ افزائی کی بلکہ اس کے لیے تعلیمی، اخلاقی، تربیتی جامع رہنما اصول بھی مرتب کیے، حضور نبی اکرم نے اہل ایمان کی جنت ماں کے قدموں تلے قرار دے کر ماں کو معاشرے کا سب سے زیادہ محترم مقام عطاءکیا، اسلام کی حقوق نسواں کی تاریخ درخشاں روایات کی امین ہے،فی زمانہ قوانین تو موجود ہیں مگر عملدرآمد کا بحران ہے“۔پر امن احتجاجی مظاہرے میں خواتین رہنماﺅں نے کہا کہ ہمیں فخر ہے کہ پاکستان میں ایک ایسی شخصیت بھی ہے جو اسلام کے بیان کردہ ویمن امپاورمنٹ کے تصورکو لیکر آگے بڑھ رہی ہے اور انہوں نے خواتین کی حقیقی امپاورمنٹ کیلئے اعلیٰ تعلیمی ،تربیتی مراکز قائم کیے، فرح ناز نے کہاکہ خطبہ حجتہ الوداع خواتین کے حقوق کا جامع چارٹر ہے۔انہوں نے کہاکہ تحریک پاکستان میں خواتین نے اسلامی روایات کو ملحوظ رکھتے ہوئے حصول پاکستان کی بے مثال جدوجہد کی۔انہوں نے کہاکہ آبادی کے نصف کو ترقی کے دھارے سے باہر رکھا گیا تو ترقی کا کوئی ہدف بھی حاصل نہیں ہو سکے گا۔

Read More
  • 393
Loading ···
No more